Ads are placed to support costs of domain and hosting. All Ads are random and are not chosen by Nohay Lyrics: Sorry for any inappropriate ads.

  • Home
  • 2021
  • Jab Mujhy Apke Qatil ne Hai Mara Baba | Kazmibrothers Nohay 2021-22

Jab Mujhy Apke Qatil ne Hai Mara Baba | Kazmibrothers Nohay 2021-22

 


Jab Mujhy Apke Qatil ne Hai Mara Baba

جب مجھے آپ کے قاتل نے ہے مارا بابا
‎ہر تماچے پے سکینہ ع نے پکار اباب

‎مجھے بالوں سے پکڑ کر ہیں تماچے مارے

‎میں نے سر شمر لعن سے مانگا جو تمہا را بابا

‎وہ جو دُر آپ نے تحفے میں مجھے بخشے تھے

‎اُن کو بے دردی سے ظالم نے اُتارا بابا

‎آپ کے سینے پے آرام سے سونے والی

‎سو کے اَب خاک پے کرتی ہے گزارا بابا ‎ساتھ رہواروں کے دوڑایا گیا ہے مجھ کو
‎چور زخموں سے بدن میرا ہے سارا بابا

نوکِ نیزہ پے اُسے دیکھوں تو دیکھوں کیسے ‎میرا اصغر تھا مجھے جان سے پیارا بابا
‎بے کفن آپ ہو بے کفن رہے گی بیٹی
‎ایک ہی جیسا مقدر ہے ہمارا بابا
‎یہ صداقبر سے معصومہ کی آئے محسن ٓ

‎ساتھ قائم ع کے چلے آنا دوبارہ بابا


Leave a Reply

error: Content is protected By the Owner of Nohay Lyrics !!